آج کا میچ: پاکستان کیلیے بقا اور افریقہ کی ہاری ہوئی جنگ – Dadbedad Online

Breaking News

Home / کھیلوں کی خبریں / آج کا میچ: پاکستان کیلیے بقا اور افریقہ کی ہاری ہوئی جنگ

آج کا میچ: پاکستان کیلیے بقا اور افریقہ کی ہاری ہوئی جنگ

کرکٹ کی دو ایسی ٹیمیں ٹورنامنٹ میں اپنی بقا کی خاطرآج مد مقابل ہوں گی جن کے بارے میں سیمی فائنل کھیلنے کی پیش گوئیاں کی جارہی تھی۔

لندن کا موسم ویسے تو صاف ہے لیکن اگر بد قسمتی کے بادل گہرے ہوئے تو بارش دونوں ٹیموں کو کرکٹ کے عالمی کپ سے باہر کر سکتی ہے۔
ٹورنامنٹ سے قبل آج کے حریفوں کو بہترین چار ٹیموں میں شمار کیا جارہا تھا لیکن اکثر مقابلوں کا نتیجہ امید کے برعکس رہا اور ورلڈکپ کے 30ویں میچ میں تخت یا تختے والی صورتحال ہے۔
ساوتھ افریقہ کیلیے آج فتح کے بعد بھی ٹائٹل کی دوڑ میں رہنے کا کوئی امکان نہیں کیوں کہ اس نے اپنے حصے کے نصف سے زائد میچ کھیل لیے ہیں اور پوائنٹس ٹیبل پر اس کی پوزیشن پاکستان سے ایک درجہ ہی اوپر ہے۔
ورلڈکپ2019 کے نصف درجن مقابلوں میں حصہ لینے کے بعد جنوبی افریقہ کی ٹیم  چارمیں ناکام رہی، ایک میچ جیتا اور ایک “خوش قسمتی” سے برابر رہا۔
پوائنٹس ٹیبل پر آٹھویں پوزیشن کی ٹیم اب تک تین نمبر ہی حاصل کر سکی ہے۔
پاکستان کا معاملہ اپنے آج کے حریف سے مختلف ہے کیوں کہ اس نے ابھی اپنے حصے کے نصف میچ کھیلے ہیں اور مستقبل میں فتح تسلسل قومی ٹیم کو ورلڈکپ میں بہتر مقام دلا سکتا ہے۔
سرفراز الیون نے کا اس ٹورنامنٹ میں آغاز بلاشبہ مایوس کن تھا لیکن انگلینڈ کیخلاف کارکردگی سے لگتا ہے کہ یہ ٹیم ورلڈکپ2019 حتمی مرحلے تک پہنچنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔
گرین شرٹس اب تک پانچ مقابلوں میں حصہ لے چکی ہے اور اس نے تین میچ ہارے، ایک جیتا اور ایک بارش کے سبب برابر رہا۔
اس ورلڈکپ میں فی الحال پاکستان نے تین نمبر حاصل کیے اور اس کی نویں پوزیشن ہے۔
آج کے میچ میں ساوتھ افریقہ کی فتح “پاکستانی ٹیم پر خودکش حملے” کے مترادف ہے جس سے ورلڈ میں دونوں کا مستقبل تاریک ہوجائے گا۔
دونوں ٹیمیں اس سے قبل مختلف دور میں ہونے والے ورلڈکپ کے چار مقابلوں میں آمنے سامنے آچکی ہیں اور پاکستان نے صرف2015 کے عالمی کپ میں جنوبی افریقہ کو زیر کیا۔

دونوں ٹیمیں دوپہر2:30 پر تاریخی میدان لارڈز میں  آمنے سامنے ہوں گی جس کی پیچ پر ہلکی ہلکی گھاس ہے اور ماہرین کے آج کے کھیل میں مطابق پہلے گیند بازی کرنا زیادہ مفید فیصلہ ثابت ہوسکتا ہے۔
سرفراز نے ٹاس جیت کر اگر اپنا سابقہ فیصلہ(پہلے گیند بازی)دہرایا تو اس بار نتائج مختلف ہوسکتے ہیں بصورت دیگر جنوبی افریقہ کے ’’خودکش حملے‘‘ کو روکنا گرین شرٹس کیلئے مشکل ہوگا۔

ایک روزہ مقابلوں میں پاکستان کے خلاف جنوبی افریقہ کا پلڑا بھاری ہے۔ دونوں ٹیموں نے 78 میچز کھیلے جن میں پاکستان نے صرف27 مقابلے جیتے ہیں۔

قومی ٹیم اپنے آخری 24 ایک روزہ میچز میں سے صرف چار ہی جیت سکی ہے۔ آج کے کھیل میں 56 فیصد امکان ہے کہ پاکستان کو مات ہوگی اور افریقہ کی ہار کا امکان صرف 44 فیصد ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے